’’مردانی‘‘ کا ’’سنگھم ریٹرنز‘‘ سے موازنہ کرنا غلط ہوگا، رانیممبئی: بالی وڈ اداکارہ رانی مکھرجی نے کہا کہ فلم مردانی کا فلم سنگھم ریٹرنز سے موازنہ کرنا غلط ہوگا۔
بالی وڈ اداکارہ رانی مکھرجی نے اپنے حالیہ انٹرویو میں کہا کہ وہ فلم میں پولیس آفیسر کا کردار نبھا رہی ہیں ،فلم میں وہ مجرموں کو مارتی پیٹتی دکھائی دیں گی۔ ایک سوال کے جواب میں انھوں نے کہا کہ فلموں کے لیے خواتین یا مردوں کے مرکزی کردار کے گرد گھومنے کی اصطلاح استعمال نہیں کرنی چاہیے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے انھوں نے کہا کہ اکثر فلموں کے حوالے سے یہ کہا جاتا ہے کہ یہ فلم خاتون کے مرکزی کردار کے گرد گھومتی ہے جب کہ اس کی نسبت یہ کم ہی کہا جاتا ہے کہ فلم مرد کے مرکزی کردار کے گرد گھومتی ہے ۔
انھوں نے کہا کہ یہی وجہ ہے کہ میں فلم کی مرد یا خاتون کے مرکزی کردار کے گرد گھومنے کی اصطلاح کے استعمال کے حق میں ہی نہیں ہوں۔انھوں نے کہا کہ فلم بارے یہ کہنا درست ہے کہ یہ فلم اچھی یا بری ہے انھوں نے کہا کہ فلم مردانی میں میرا کردار انتہائی منفرد نوعیت کا ہے اس فلم کے لیے میں نے مارشل آرٹس کی خصوصی کلاسز لیں اور اس میں دکھائے گئے تمام ایکشن حقیقی ہیں فلم مردانی ایک خاتون کی جرات ودلیری پر مبنی فلم ہے جو چھوٹے بجٹ کی فلم ہے۔ اس کا فلم سنگھم ریٹرنز سے کوئی مقابلہ نہیں جو بڑے بجٹ کی فلم ہے۔ فلم 22 اگست کو سینما گھروں میں نمائش کے لیے پیش کی جائے گی۔