اسلام آباد: پاکستان اور ایف اے ٹی ایف ایشیا پسفک گروپ کے مابین مذاکرات کا حتمی دور آج( پیر) سے اسلام اباد میں ہوگا۔ ذرائع کے مطابق یہ مذاکرات آج 8 اکتوبر سے 19 اکتوبر تک جاری رہیںگے۔

پاکستان ایف اے ٹی ایف کو کیے گئے عملی اقدامات سے آگاہ کرے گا اور اینٹی منی لانڈرنگ اور دہشت گردوں کی مالی معاونت روکنے سے متعلق ریگولیشنز میں ترامیم کی رپورٹ پیش کرے گا۔ وفد وزارت خزانہ، وزارت داخلہ، اسٹیٹ بینک، فنانشل مانیٹرنگ یونٹ کے حکام سے ملاقاتیں کرے گا۔ وفد ایس ای سی پی اور قانون نافذ کرنے والے اداروں کے حکام سے بھی ملاقاتیں کرے گا۔

مذاکرات کے دوران انسداد منی لانڈرنگ، دہشت گردوں کی مالی معاونت روکنے کے انتظامی و قانونی اقدامات کا جائزہ لیا جائے گا جبکہ غیرمنافع بخش تنظٰیموں، منشیات کی اسمگلنگ روکنے سے متعلق امور زیرغور آئیںگے۔ حکومت پاکستان نے انسداد منی لانڈرنگ اور دہشت گردوں کی مالی معاونت روکنے کے لیے ٹھوس اقدامات کیے ہیں۔ ایف اے ٹی ایف کی سفارشات پر ریگولیشنز 2018 میں ترامیم کی منظوری دے دی گئی۔