450

بھارتی جارحیت کے خلاف اسلامی تعاون تنظیم میدان میں آگئی

جدہ: اسلامی تعاون تنظیم (اوآئی سی) کے نمائندہ خصوصی نے کہا ہے کہ کل مقبوضہ کشمیر سمیت لائن آف کنٹرول( ایل او سی) کا دورہ کریں گے جہاں سنگین صورت حال کا جائزہ لیا جائے گا۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق او آئی سی کے نمائندہ خصوصی نے بتایا کہ اس اہم دورے کے بعد ایک جامع رپورٹ تیار کی جائے گی، پاکستان مقبوضہ کشمیر کو اہمیت دیتا ہے اس لیے او آئی سی نے بھی اہمیت دی۔

’کشمیر کی حیثیت تبدیل کرنے پر پاکستان نے سمٹ بلانے کا مطالبہ کیا،ن جس پر او آئی سی سمٹ بلائی گئی، 75رکن ممالک مسئلہ کشمیر پر پاکستان کی حمایت کرتے ہیں، او آئی سی کی پوری کوششیں جاری رہیں گی‘۔

یہ بھی پڑھیں:برطانوی رکن پارلیمنٹ مودی سرکار پر ٹوٹ پڑے

او آئی سی کے مطابق چالیس سالوں سے او آئی سی باقاعدہ معاملہ دیکھ رہا ہے، ایشو کو دیکھنے کے لیے 1994میں اسپیشل کنٹکٹ گروپ بنایا ہے، مقبوضہ کشمیر کے حوالے سے بہت سارے قرار دادیں منظور کی گئیں۔

خیال رہے کہ مقبوضہ کشمیر میں بھارتی جارحیت تاحال برقرار ہے جبکہ لائن آف کنٹرول پر بھی بلااشتعال فائرنگ کا سلسلہ وقفے وقفے سے جاری رہتا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں