422

سال 2019 : جرائم کی شرح میں پنجاب سب سے اوپر

اسلام آباد : وزارت داخلہ کا کہنا ہے کہ سال 2019 پنجاب جرائم میں4 لاکھ 90155مقدمات کیساتھ پہلے نمبر پر ہے، جبکہ اسلام آباد میں بچوں سےجنسی زیادتی کے واقعات میں کمی ہوئی۔

تفصیلات کے مطابق قومی اسمبلی کے اجلاس وقفہ سوالات میں تحریری جوابات میں سال 2019میں ملک بھرمیں ہوئے جرائم کی تفصیلات پیش کی گئیں ، جس میں وزارت داخلہ نے بتایا 2019 میں7 لاکھ 77ہزار251جرائم ریکارڈ ہوئے۔

وزارت داخلہ کا کہنا تھا کہ پنجاب جرائم میں4 لاکھ 90155مقدمات کیساتھ پہلےنمبرپر، کے پی 1لاکھ 78131مقدمات کیساتھ دوسرےنمبر پر، سندھ 85676 جرائم کے مقدمات کیساتھ تیسرے نمبر پر رہا۔

تحریری جواب میں بتایا گیا پشاور38926 جرائم کیساتھ پہلے نمبر پر ہے جبکہ کوہستان222جرائم کے ساتھ سب سےکم جرائم والاضلع رہا۔

یہ بھی پڑھیں:

ریلوے خسارہ کیس : شیخ رشید اور اسد عمر کوذاتی حیثیت میں پیش ہونے کا حکم


وزارت داخلہ کا کہنا تھا کہ اسلام آباد میں بچوں سےجنسی زیادتی کےواقعات میں کمی ہوئی، سال 2018میں اسلام آباد میں بچوں سے زیادتی کے 66 واقعات اور سال 2019میں بچوں سےزیادتی کے60واقعات ہوئے۔

تحریری جواب کے مطابق سال 2018میں بچوں سےزیادتی کے80ملزمان اور سال 2019میں بچوں سے زیادتی کے75ملزمان گرفتار ہوئے جبکہ 2019میں ایک ملزم کو سزا ہوئی اور باقی کا ٹرائل ہورہا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں