381

ملتان ڈسٹرکٹ بار سے خاتون کو ٹھگنے والا جعلی وکیل گرفتار

ملتان: پولیس نے شکایت پر ملتان ڈسٹرکٹ بار سے خاتون کو ٹھگنے والا جعلی وکیل گرفتار کر لیا۔

تفصیلات کے مطابق ڈسٹرکٹ بار ملتان سے جعلی وکیل ساتھی سمیت پکڑا گیا، امین الرحمان نامی شخص نے جعلی وکیل بن کر خاتون سے 60 ہزار روپے کیس فیس وصول کی تھی۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق ابن سینا اسپتال کے قریب رہایش پذیر خاتون معراج کنول نے امین الرحمان کو اپنے بیٹے کی رہائی کے لیے فیس دی تھی، بیٹا رہا نہ ہونے پر کچہری جا کر خاتون نے سعید احمد بھٹہ ایڈووکیٹ کو شکایت کر دی۔

یہ بھی پڑھیں:یواین سیکریٹری جنرل انتونیوگوتریس کا کرتارپور کا دورہ

خاتون کی شکایت پر ڈسٹرکٹ بار کا ریکارڈ چیک کیا گیا تو مذکورہ وکیل کا کوئی ریکارڈ نہ ملا، پولیس تھانہ گلگشت نے اطلاع پر امین الرحمان نامی جعلی وکیل کو ساتھی آصف سمیت حراست میں لے لیا۔

یاد رہے کہ گزشتہ برس اکتوبر میں کراچی میں بھی سپریم کورٹ سے ایک جعلی وکیل کو گرفتار کیا گیا تھا، سلام ولد عبدالسلام نامی شخص اپنے آپ کو وکیل بنا کر کیس کی سماعت کر رہا تھا، جے ایم ویسٹ کی عدالت میں کیس میں دلائل دیتے ہوئے پکڑا گیا، عدالت نے وکالت کی ڈگری مانگی تو اس کی اصلیت سامنے آ گئی، ملزم کو گرفتار کر کے اس کے خلاف ایف آئی آر درج کی گئی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں