392

گرے لسٹ میں نام رہے گا یا نہیں ؟ پاکستان کی قسمت کا فیصلہ آج متوقع

اسلام آباد: فنانشل ایکشن ٹاسک فورس کے اجلاس میں پاکستان کا نام گرے لسٹ سے نکالنے یا برقرار رکھنے سے متعلق فیصلہ آج متوقع ہے۔

تفصیلات کے مطابق پیرس میں فنانشل ایکشن ٹاسک فورس کا اجلاس جاری ہے ، وفاقی وزیر برائے ریونیوحماد اظہر کی قیادت پانچ رکنی وفد اجلاس میں شریک ہیں، گرے لسٹ کے معاملے پر پاکستان کےبارےمیں اہم فیصلہ آج ہونے کا امکان ہے۔

بھارت کی پاکستان کوبلیک لسٹ میں ڈالنےکی کوشش دوبارناکام ہوچکا ہے ، بھارتی سازش کی کسی بھی ملک نےحمایت نہ کی تھی، پاکستان کو گرے لسٹ سے نکلنے کے لیے 15 ووٹوں درکار ہے جبکہ رکن ممالک کا کہناہےکہ پاکستان مؤثراقدامات کررہاہے، کئی اقدامات لائق تحسین ہیں۔

ذرائع کے مطابق پلانری سیشن میں پاکستان کی کارکردگی رپورٹ کی تعریف کی گئی اور پاکستان کے ستائیس میں سے چودہ نکات پرمکمل عمل کی ہرسطح پر پذیرائی ہوئی ہے۔

پاکستان کوگرے لسٹ سےنکلنے کے لیے مزید اقدامات کرناہوں گے تاہم پاکستان کوگرےلسٹ سےنکلنےکیلئےاکتوبرتک کاوقت دیئے جانے کا امکان ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ ایف اے ٹی ایف اسٹیٹ بینک،ایس ای سی پی،ایف بی آر ،ایف ایم یوسےخوش ہیں اور نیکٹا کی کارکردگی پر اطمینان کا اظہار کیا جبکہ پاکستان نے ڈالرکی اسمگلنگ کی روک تھام کیلئےمناسب قانونی سازی کی۔

ذرائع کے مطابق پاکستان کومنی لانڈرنگ قوانین پرعمل درآمدیقینی بناناہوگا جبکہ نیکٹا کوصوبائی سطح پررفاعی اداروں کی مکمل جانچ پڑتال یقینی بنانےکی ہدایت کی گئی ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ پاکستان کو ترکی، چین اورملائیشیاسمیت دوست ممالک کی حمایت حاصل ہیں جبکہ سنگاپور، ہالینڈ، ہانگ کانگ، کینیڈا ،امریکا نے پاکستانی اقدامات کی تعریف کی اور فرانس، جاپان،سعودی عرب، برطانیہ نے بھی پاکستان کی حوصلہ افزائی کی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں