146

کورونا وائرس سے ہلاکتوں میں اضافہ، چین کا غیر ملکی صحافیوں کو ملک چھوڑنے کا حکم

چین نے کورونا (کووڈ 19) کے بڑھتے واقعات پر تنقید کے پیش نظر  غیر ملکی صحافیوں کو ملک چھوڑنے کا حکم دیدیا۔

چین کے نیشنل ہیلتھ کمیشن کے مطابق کورونا وائرس کے واقعات میں مسلسل کمی واقع ہو رہی ہے اور گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران وائرس کے 1693 نئےکیسز رپورٹ ہوئے ہیں۔

حکام کے مطابق چین کے صوبے ہوبئی میں کورونا وائرس سے مزید 108 افراد ہلاک ہوئے جس کے بعد ہلاکتوں کی تعداد 2 ہزار 112 ہو گئی ہے۔

نیشنل ہیلتھ کمیشن کے مطابق چین میں کورونا وائرس سے متاثرہ افراد کی تعداد 75 ہزار تک پہنچ گئی ہے۔

چین کی سرکاری خبر ایجنسی کے مطابق روز مرہ کی بنیاد پر وائرس سے متاثرہ افراد کی تعداد میں مسلسل کمی دیکھنے میں آ رہی ہے۔

یہ بھی پڑھیں:کورونا وائرس: ایران میں ہلاکتوں کا پہلا کیس سامنے آگیا

چین: کورونا کیخلاف برسرپیکار طبی عملے کے بچوں کو امتحان میں اضافی نمبر دینے کا فیصلہ

چین کے علاوہ ایران میں بھی کورونا وائرس سے متاثرہ دو افراد کی اموات کی تصدیق ہوئی ہے جو مشرق وسطیٰ میں وبا کا پہلا کیس ہے۔ اس کے علاوہ ہانگ کانگ، جاپان، تائیوان اور فرانس میں بھی کورونا کے باعث ہلاکتیں ہو چکی ہیں۔

دوسری جانب کورونا وائرس کے حوالے سے چینی حکومت کے اقدامات کو تنقید کا نشانہ بنانے پر چین کی وزارت خارجہ نے غیر ملکی صحافیوں کو فوری طور پر ملک چھوڑنے کے احکامات جاری کر دیئے۔

فوٹو: اے ایف پی

چینی وزارت خارجہ کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ چین کے عوام ایسے میڈیا کو خوش آمدید نہیں کہتے جو نسل پرستانہ بیانات دیتا ہو اور چین کو داغدار کرنا چاہتا ہو۔

یہ پہلی بار ہوا ہے کہ چین نے کسی غیر ملکی میڈیا آرگنائزیشن سے تعلق رکھنے والے متعدد افراد کو ایک ساتھ ملک چھوڑنے کا حکم دیا۔

چینی حکام کے اس فیصلے پر ردعمل دیتے ہوئے فارن کورسپونڈنٹ کلب آف چائنا کے حکام نے کہا کہ غیر ملکی میڈیا کو ملک چھوڑنے کا حکم میڈیا اداروں کو ڈرانے اور چین میں تعینات صحافیوں سے بدلہ لینے کے لیے ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں