413

ایف اےٹی ایف کا اجلاس : پاکستان پر بلیک لسٹ کے تمام خدشات دور

پیرس : ایف اےٹی ایف کے اجلاس میں رکن ممالک نے پاکستان کی کارکردگی کوقابل ستائش قرار دے دیا ، جس کے بعد پاکستان پر بلیک لسٹ کے تمام خدشات دور ہوگئے۔

تفصیلات کے مطابق پیرس میں ایف اےٹی ایف کا اجلاس جاری ہے، پاکستان پر بلیک لسٹ کے تمام خدشات دور ہوگئے ، رکن ممالک نےپاکستان کی کارکردگی کوقابل ستائش قرار دے دیا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ بھارت پاکستان کو بلیک لسٹ میں دھکیل نہیں سکتا، پاکستان کوبلیک لسٹ سے بچنے کیلئےمطلوبہ حمایت حاصل ہے، گرے لسٹ سےمتعلق پاکستان کیلئےفی الحال ووٹنگ نہیں ہوگی، ایف اے ٹی ایف کی گرے لسٹ 2سال میں ختم ہوتی ہے۔

مزید جانئیے:پیشی پر آئے ملزمان کی ایک دوسرے پر فائرنگ، پولیس اہل کار بھاگ گئے

ذرائع کے مطابق پاکستان کو 27اہداف پر اکتوبر 2020تک عملدرآمدکرناہے، پاکستان نے27میں سے 14اہداف پرواضح پیشرفت کی، نیکٹا اور صوبائی سطح پرفلاحی تنظیموں کی چانچ پڑتال مکمل کی جائے گی۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ ایف اے ٹی ایف اسٹیٹ بینک،ایس ای سی پی،ایف بی آر ،ایف ایم یوسےخوش ہیں اور نیکٹا کی کارکردگی پر اطمینان کا اظہار کیا جبکہ پاکستان نےڈالرکی اسمگلنگ کی روک تھام کیلئےمناسب قانونی سازی کی۔

ذرائع کے مطابق پاکستان کو ترکی، چین اورملائیشیاسمیت دوست ممالک کی حمایت حاصل ہیں جبکہ سنگاپور، ہالینڈ، ہانگ کانگ، کینیڈا ،امریکا نے پاکستانی اقدامات کی تعریف کی اور فرانس، جاپان،سعودی عرب، برطانیہ نے بھی پاکستان کی حوصلہ افزائی کی ہے۔

پاکستان بیشترسفارشات پرعملدرآمدمکمل کرچکاہے، 27 اہداف کے حصول پرکوششیں جاری رکھےگا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں